کسی کی یاد میں دنیا کو ھیں بھلائے ہوئے
زمانہ گزرا ھے اپنا خیال آئے ہوئے

بڑی عجیب خوشی ھے غم_ محبت بھی
ھنسی لبوں پہ مگر دل پہ چوٹ کھائے ہوئے

ھزار پردے ھوں، پہرے ھوں، یا ہوں دیواریں
رھیں گے میری نظر میں تو وہ سمائے ہوئے

کسی کے حسن کی بس اک کرن ہی کافی ھے
یہ لوگ کیوں میرے آگے ہیں شمع لائے ہوئے

- راجندر کرشن -

Loading more stuff…

Hmm…it looks like things are taking a while to load. Try again?

Loading videos…